میرہزار خان (رضوانہ ریاض)پسند کی شادی کرنے پر لڑکے کی والدہ کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا دیا گیا، ویڈیو بھی بنالی۔ تھانہ بیٹ میر ہزار خان کے نواحی علاقہ بیٹ ہزاری کی رہائشی 35 سالہ حاجرہ کوثرپچارنے تھانہ میں مقدمہ اندراج کرانے کے بعد بتایا کہ دو مئی کو اس کے بیٹے فیصل ریاض پچار نے موضع میلہ چچہ کے رہائشی غلام فرید موہانہ کی بیٹی شانو عرف شاہین سے کورٹ میرج کی جس پر لڑکی کے والد کی طرف سے دھمکیاں مل رہی تھیں۔ تین جون کو ملزمان عبدالکریم وغیرہ گھر گھس آئے، اہلخانہ کو یرغمال بنا کر نقدی اور زیورات لوٹ لئے۔ ساس، بہو کو اپنے ساتھ لے گئے۔ملزمان زاہد، شکیل، ظفر، عامر وغیرہ نے اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنایا اور ویڈیو بھی بنالی۔ پولیس کارروائی سے گریزاں ہے۔ میر ہزار پولیس نے نامزد کردہ ملزمان کے برعکس ملزمان کے خلاف ایف آئی آر درج کی۔ اب بیان حلفی پر دوبارہ ملزمان نامزد کردئیے ہیں۔ پولیس نے اپنے موقف میں کہا کہ میرٹ پر تفتیش کرہرے ہیں۔