بہاولپور ( فدرا ملک) افرادی طاقت سے منزل صوبہ کے آگے کسی قوت کو رکاوٹ نہیں بننے دیں گے ۔ تشکیل پاکستان کے بعد تعمیر پاکستان کیلئے بہاولپور نے انمٹ قربانیاں دیں لیکن ابن الوقت سیاستدانوں ، عوامی نمائندوں اور حکمرانوں نے راستے میں ہی جیبیں کاٹ لیں ۔ ان خیالات کا اظہار متحدہ تحریک بحالی صوبہ بہاولپور کے مرکزی صدر قاری مونس بلوچ نے معاون خصوصی ڈاکٹر عامر اسلام خاں کے ہمراہ چک نمبر 5بی سی میں قاری رحمت اللہ چوہدری کے ختم قرآن کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ انہوں نے کہا متحدہ تحریک بحالی صوبہ بہاولپور کے زیر اہتمام منعقد ہونیوالی کُل جماعتیں صوبہ کانفرنس میں پی ٹی آئی ، پیپلز پارٹی اور (ن)لیگ سمیت 30سے زائد سیاسی و مذہبی جماعتوں صحافیوں تاجر تنظیموں ،دانشوروں اور شاعروں نے شرکت کی یقین دہانی کرا ئی ہے ۔ قاری مونس بلوچ نے کہا عید الفطر کے بعد کُل جماعتی صوبہ کانفرنس کا ون پوائنٹ ایجنڈاصرف’’ بحالی صوبہ‘‘ ہوگا ۔قاری مونس بلوچ نے کہا بحالی خاطر گرینڈ الائنس کی تشکیل کے لئے کئی سیاسی ،مذہبی جماعتوں سے مشاورت جاری ہے جس پر کانفرنس کے بعد غور کیا جائے گا ۔ انہوں نے کہا ملک کی چھوٹی بڑی تمام سیاسی ومذہبی جماعتیں ہمیشہ بحالی صوبہ کی حامی رہی ہے ہیں لیکن صوبہ تحریک کی آڑ میں ایوانوں میں پہنچنے والے سیاستدانوں نے عوام سے ہمیشہ دھوکہ کیا ہے۔اس موقع پر مختلف چکوک اور بستیوں کے 200سے زائد افراد نے قاری مونس بلوچ کی حقیقی قیادت کو تسلیم کر تے ہوئے شامل ہونے کا اعلان کیا۔