دبئی سٹی(سی این این) یہ سوال عام سننے کو ملتا ہے کہ روزے کی حالت میں انجکشن کے بارے میں کیا حکم ہے، روزہ قائم رہتا ہے یا ٹوٹ جاتا ہے؟ خلیج ٹائمز کے مطابق مذہبی سکالر ڈاکٹر محمد الیادا القبیسی اس بارے میں جاری کئے گئے فتوے میں کہا ہے کہ دوا کا انجکشن جو کہ پٹھے یا رگ میں لگایا جاتا ہے اس سے روزہ نہیں ٹوٹتا کیونکہ اس کے اجزاءنارمل طریقے سے براہ راست پیٹ میں نہیں پہنچتے۔ یہ کسی حد تک جلد کے ذریعے ہونے والے انجذاب جیسا ہے جس کا روزے پر اثر نہیں پڑتا۔ ہاں اگر انجکشن اس طرح کا ہے کہ اس سے جسم کو طاقت پہنچتی ہے، گویا یہ کھانے پینے کا بدل ہے، تو اس صورت میں روزہ ٹوٹ جائے گا۔